پی ڈی ایم کا پہلا جلسہ کوئٹہ کے بجائے کراچی میں ہوگا

کراچی: پاکستان پیپلزپارٹی کی جانب سے  پی ڈی ایم کے کوئٹہ جلسے کی تاریخ پر اعتراض کے بعد اپوزیشن نے جلسے کی تاریخ میں ایک بار پھر ردوبدل کردی۔ 

پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے پہلے جلسے کی تاریخ میں تبدیلی کے بعد ایک بار پھر خدشہ پیدا ہوگیا ہے کہ یہ جلسہ اب 18 اکتوبر کو بھی نہیں ہوگا، اس سے قبل متحدہ اپوزیشن کا پہلا جلسہ کوئٹہ میں 11 اکتوبر کو ہونا تھا جو بعد ازاں 18 اکتوبر کو کردیا گیا تھا تاہم پیپزپارٹی نے اس تاریخ پر بھی اعتراض اٹھادیا ہے۔

ذرائع کے مطابق پیپلزپارٹی نے جلسے کی تاریخ سے متعلق اعتراضات کمیٹی کے سامنے رکھ دیئے جس میں کہا گیا کہ سانحہ کارساز کے جلسے کے باعث پارٹی قیادت کوئٹہ جلسے میں شرکت نہیں کرسکے گی، ہر سال کی طرح اس سال بھی 18 اکتوبر کو جلسہ ہوگا۔

پیپلزپارٹی نے مطالبہ کیا کہ پی ڈی ایم کے کوئٹہ جلسے کے لئے تاریخ تبدیل کی جائے، پیپلزپارٹی کے اعتراضات کے بعد جلسے کے لئے نئی تاریخ پر مشاورت ہوئی اور آخرکار یہ فیصلہ کیا گیا کہ کوئٹہ جلسہ 18 اکتوبر کو نہیں بلکہ 25 نومبر کو ہوگا۔

بعد ازاں میڈیا سے بات کرتے ہوئے پی ڈی ایم کے سیکریٹری جنرل شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ 18 اکتوبر کو کوئٹہ کے بجائے اب کراچی میں جلسہ ہوگا جس کی میزبانی پیپلزپارٹی کرے گی اور کوئٹہ میں 25 نومبر کو جلسہ ہوگا جب کہ 22 نومبر کو پشاور اور 13 دسمبر کو لاہور میں جلسہ ہوگا۔ اس کے علاوہ 30 نومبر کو ملتان، 16 دسمبر گوجرانوالہ اور 27 دسمبر کو لاڑکانہ میں بھی پی ڈی ایم کا جلسہ ہوگا۔